Jump to content
ALL SEX SECTION WILL CLOSED IN RAMADAN ×
URDU FUN CLUB
Sign in to follow this  
Page3

بھکاری یا موت کے سوداگر

Recommended Posts

عزیز ساتھیو

میرا ایک شہر سے گزر ہوا۔کچھ آفس کے کام سے جانا تھا۔میں آفس کے کام کو نمٹا کر نکلا تو رستے میں ایک مارکیٹ کے سامنےایک بھکاری عورت کو دیکھا! جو اپنے شیرخوار بچے کو ایک لکڑی کی ریڑھی پر لٹا کربھیک مانگ رہی تھی۔دھوپ سے اس شیر خوار کا برا حال تھا۔عورت جوان تھی اور چہرے کے خدوخال سے لگ رہا تھا کہ چہرے پر کافی مہحنت کی ہے۔مگر بچے کے اوپر کوئی کپڑا تک نہیں تھا۔

کیا ایسے لوگ صرف اپنی غرض پوری کرنے کے لیے چھوٹے چھوٹے بچوں کو تکلیفیں دینا بہتر سمجھتے ہیں؟

خیر میرا بات کرنے کا اصل مقصد یہ ہے کہ کیا ہمیں ایسے لوگوں کو پیسے دینے چاہییں یا نہیں؟

پلیز اپنے اپنے کومنٹس سے اس بات کی وضاحت کرنے کی کوشش کریں کہ ایسا کرنے والے لوگوں کے ساتھ کیا ہونا چاہیے؟؟اور کس طرح اس معاشرے کی بقا کے لئے ہم کچھ کر سکتے ہیں؟

Share this post


Link to post

اردو فن کلب کے پریمیم سیریز اور پریمیم ناولز اردو فن کلب فورم کا قیمتی اثاثہ ہیں ۔ جو فورم کے پریمیم رائیٹرز کی محنت ہے اور صرف وقتی تفریح کے لیئے فورم پر آن لائن پڑھنے کے لیئے دستیاب ہیں ۔ ہمارا مقصد اسے صرف اسی ویب سائیٹ تک محدود رکھنا ہے۔ تاکہ یہ گناہ جاریہ نہ بنے ۔ اسے کسی بھی طرح سے کاپی یا ڈاؤن لوڈ کرنے یا کسی دوسرے دوست یا ممبر سے شیئر کرنے کی بالکل بھی اجازت نہیں ہے ۔ جو ممبران اسے کسی گروپ یا اپنے دوستوں سے شئیر کر رہے ہیں ۔ ان کو مطلع کیا جاتا ہے کہ وہ اسے کسی دوسرے ممبر ثانی سے شئیر نہیں کر سکتے ۔ ورنہ ان کا مکمل اکاؤنٹ بین کر دیا جائے گا ۔ اور دوبارہ ایکٹو بھی نہیں کیا جائے گا ۔ اکاؤنٹ کینسل ہونے پر کسی بھی سیئریل کی نئی اپڈیٹس کے لیئے ممبر کو دوبارہ قسط 01 سے ممبرشپ حاصل کرنا ہو گی ۔ اور ڈیٹا شیئر کرنے والہ ممبراس بات کا بھی عملی اقرار کرے گا کہ وہ بروز قیامت فورم انتظامیہ، سٹوری رائیٹر اور فورم ایڈمن کے تمام گناہوں کا اکلوتا وارث ہو گا ۔ اور بروز قیامت اپنی تمام نیکیاں (جو بھی اس کے نامہ اعمال میں ہوئیں ) بروز قیامت فورم ایڈمن اور کہانی رائٹر کو دینے کا پابند ہو گا۔ اگر کوئی ممبر اب بھی ایسا کرتا ہے اور گناہ جاریہ کا سبب بنتا ہے ۔ تو یہ سب رولز اس پر خود بخود لاگو ہوں گے ۔ ۔ ۔ ایڈمن اردو فن کلب

یہ ایک تلخ حقیٖقت ہے، زیادہ تر لوگ غربت نہیں اس کے اثاثہ جات دیکھ کر دیتے ہیں،ہم سب اس میں شامل ہیں۔

Share this post


Link to post

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now
Sign in to follow this  

×
×
  • Create New...